دنیا بھر کو قرض دینے والے ممالک بھی مقروض نکلے

جاپان کا پہلا، دوسرے نمبر پر آئر لینڈ ہے، جہاں کا ہر شہری 67 ہزار 147 ڈالر کا مقروض ہے
پاکستان کے ہر شہری کے ذمہ اوسطاً 8 سو ڈالر قرض تھا، ٹاپ ٹین ممالک بھی قرض دینگے، رپورٹ
کراچی(نیوز ڈیسک)حکومت کی طرف سے ریکارڈ مالیت میں قرضے لینے کے باوجود عوام پر قرضوں کا بوجھ اب بھی دوسرے ملکوں سے کافی کم ہے۔ دنیا کے150سے زائد ممالک کے شہری پاکستانیوں سے زیادہ مقروض ہیں۔تفصیلات کے مطابق ملکی قرضوں اور آبادی کے تناسب سے جاپانی دنیا بھر میں سب سے زیادہ مقروض ہیں۔ جاپان کے ہر شہری پر 85 ہزار 700 ڈالر قرضوں کا بوجھ ہے۔دوسرے نمبر پر آئر لینڈ ہے۔ جس کا ہر شہری67ہزار 147ڈالرکا مقروض ہے۔ رپورٹ کے مطابق2016کے اختتام پر سنگاپور کا ہر شہری 56ہزار113ڈالر، بلجیم کا ہر شہری 44 ہزار 202 ڈالر اور ہر امریکی42ہزار504ڈالر کا مقروض تھا۔تاہم پاکستان کے ہر شہری کے ذمہ اوسطا8سو ڈالر کا قرض بنتا ہے۔ ہر بھارتی نے9سو ڈالر، ہر چینی نے13سو ڈالر اور ہر ایرانی نے6سو ڈالر کا قرض ادا کرنا ہے۔زیادہ قرض دینے والے ٹاپ ٹین ممالک میں کنیڈا کا ہر شہری اوسطا42ہزار 142ڈالر، اٹلی کا40ہزار461ڈالر اور ہر برطانوی شہری اوسطا36ہزار206ڈالر کا مقروض ہے۔آبادی کے تناسب سے کم ترین قرض لینے والوں میں لائبیریا پہلے نمبر پر ہے، جس کا ہر شہری صرف27ڈالر کا مقروض ہے، تاجکستان کے ہر شہری پر اوسطا قرض کا بوجھ صرف50ڈالر ہے۔

متعلق امتیاز کاظمی