نوازشریف کے ماتحت جے آئی ٹی کا کوئی فائدہ نہیں،عمران خان

تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے پاناما لیکس کیس کی تحقیقات کے لیے عدالتی حکم کے مطابق جوائنٹ انویسٹی گیشن ٹیم کے قیام کو غیر سود مند قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ نوازشریف کے ماتحت جے آئی ٹی کا کوئی فائدہ نہیں، نوازشریف کےوزیراعظم ہوتے ہوئےکیا یہ ادارے انویسٹی گیشن کرسکتے ہیں؟

قومی اسمبلی کے اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو میں پاناما کیس کے فیصلے پر تبصرہ کرتے ہوئے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان کا کہنا تھا کہ ‘پاکستان کی تاریخ میں ایسا کبھی نہیں ہوا کہ ایک موجودہ وزیراعظم کے خلاف سپریم کورٹ نے ایسے ریمارکس دیئے ہوں’۔

انہوں نے کہا کہ ان کا قطری خط سپریم کورٹ نے رد کردیا عدالت نے ہمارے الزامات پر جے آئی ٹی بنائی ہے وزیراعظم جمہوریت میں اخلاقی قوت سے حکومت کرتا ہے دنیا میں کسی ملک میں ایسا فیصلہ آتا توحکمراں پارٹی خود وزیر اعظم سے استعفا لیتی۔

چیئرمین پاکستان تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ ایک طرف سپریم کورٹ کہتی ہے کہ پاکستان میں انصاف کے ادارے مفلوج ہوچکے ہیں، تو کیا یہ ادارے نواز شریف کے وزیراعظم ہوتے ہوئے ان کے خلاف تحقیقات کرسکتے ہیں؟ کیا ہماری طرف سے استعفیٰ کی یہ ڈیمانڈ غلط ہے؟

Print Friendly

متعلق سرفرازاحمد عباسی