بھارتی حکومت سے شہدا کے خون کی قیمت طلب نہ کریں: علی گیلانی

سرینگر : کل جماعتی حریت کانفرنس کے سربراہ سید علی گیلانی نے کشمیر میں خون خرابے کا ذمہ دار بھارت کو قرار دے دیا‘ یہ بھی کہا کہ حکومت سے شہدا کے خون کی قیمت طلب نہ کریں۔

تفصیلات کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں کل جماعتی حریت کانفرنس کے چیئرمین سید علی گیلانی نے ریاست میں جاری خون خرابے پر سخت افسوس اور تشویش کا اظہار کرتے ہوئے اس کا ذمہ دار بھارتی حکومت کوقراردیا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ بھارت کی حکومت کشمیر کے حوالے سے ضد اور ہٹ دھرمی کی پالیسی پر قائم ہے۔

کشمیرمیڈیا سروس کے مطابق سید علی گیلانی نے کولگام میں شہید ہونے والے نوجوانوں جنید متو اور عادل احمد میرکے نماز جنازہ سے ٹیلیفونک خطاب کرتے ہوئے کہا کہ شہداءکے مقدس خون کا تقاضا ہے کہ ہم ان کے چھوڑے ہوئے مشن کو پایہ تکمیل تک پہنچانے میں اپنا حق ادا کریں۔

انہوں نے یہ بھی کہا کہ ان شہدا کے خون کی قیمت ظالم اور جابر سے مراعات کے عوض طلب نہ کریں، یہی ہمارے لیے شہداءکے حق میں بہترین خراج ہوگا۔

یاد رہے کہ گزشتہ سال کشمیر میں برہان وانی کی شہادت کےبعد بھارت کے خلاف ہونے والے مظاہروں میں شدت آگئی تھی اور تحریکِ آزادی کی عوامی جدوجہد میں اضافہ دیکھنے میں آیا تھا۔

بھارت نے کشمیریوں کی آواز دبانے کے لیے وادی میں تشدد کا راستہ اختیار کیا اور نہتے مظاہرین پر پیلٹ گنوں کا وحشیانہ استعمال کیا جس کے سبب عالمی سطح پر بھارت کو مذمت کا نشانہ بنایا گیا تھا۔

یاد رہے کہ کچھ دن قبل آرمی چیف قمر باجوہ نے بھارتی جارحیت کا کامیابی سے مقابلہ کرنے پر کشمیریوں کی جرات کو سلام پیش کرتے ہوئے کہا کہ معصوم کشمیریوں کے حق خود ارادیت کے لئے حمایت جاری رکھیں گے۔


اگرآپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اوراگرآپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پرشیئرکریں۔

Print Friendly

متعلق نامہ نگار