سپریم کورٹ نے جے آئی ٹی کے لئے خاص ہدایات جاری کر دیں !

13

اسلام آباد ۔ سپریم کورٹ نے جے آئی ٹی کو اپنی توجہ کام پر مرکوز کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ جے آئی ٹی اپنی ساری توجہ کام پر مرکوز رکھے ۔ جے آئی ٹی کو دائیں بائیں دیکھنے کی ضرورت نہیں ۔ جے آئی ٹی سے عدم تعاون کے سنگین نتائج برآمد ہونگے۔

جے آئی ٹی کو دھمکیوں پر دائر درخواست کی سماعت کے دوران تین رکنی بینچ کے رکن جسٹس عظمت سعید شیخ نے ریمارکس دیے کہ جے آئی ٹی میڈیا سمیت کسی کی باتوں پر کان نہ دھرے ۔اٹارنی جنرل کی معاونت سے معاملہ منطقی انجام تک پہنچائیں گے اور ضرورت پڑی تو ڈی جی آئی بی کو بھی طلب کیا جا سکتا ہے۔
جسٹس عظمت سعید شیخ نے ریمارکس دیے کہ یہ کوئی سائیکل نہیں جو ہر چیز کو لیک کا نام دیا جائے ، یہ معلومات باقاعدہ جاری کی جا تی ہیں ، آئی بی نے اعتراف جرم کیا ۔ بتایا جائے آئی بی ریاست کیلئے کام کرتی ہے یا کسی فرد کیلئے ۔ کیسے مان لوں میری مانیٹرنگ نہیں ہو رہی ۔۔کیا آئی بی ہمارا ڈیٹا بھی اکٹھا کرتی ہے۔ہم کیسے مان لیں کے آئی بی ہماری مانیٹرنگ نہیں کر رہی ، آئی بی کو کس نے اختیار دیا کہ ڈیٹا اکھٹا کرے ؟۔

سپریم کورٹ نے ڈی جی ایف آئی اے کو ریکارڈ ٹیمپرنگ معاملے کا جائزہ لیکر متعلقہ افراد کیخلاف کارروائی کی رپورٹ پیش کرنے کا حکم دیتے ہوئے درخواست کی  سماعت کل تک ملتوی کر دی:۔

متعلق نامہ نگار