پاکستان کے قابل بھروسہ ایٹمی صلاحیت کی بدولت بھارت جنگ سے باز ہے ، ترجمان پاک فوج

پاک فوج کے ترجمان میجر جنرل آصف غفور کا کہنا ہے کہ پاکستان کی قابل بھروسہ جوہری صلاحیت نے ہی بھارت کو جنگ سے باز رکھا ہوا ہے۔انٹر سروس پبلک ریلیشنز کے ڈائریکٹر جنرل میجر جنرل آصف غفور نے سرکاری ٹی وی کو دیئے گئے انٹرویو میں بھارتی آرمی چیف کے بیان پر اپنے ردعمل میں کہا کہ ”ہم سمجھتے ہیں کہ آرمی چیف ایک ذمے دارانہ تقرری ہوتی ہے اور اس قسم کے غیر ذمے دار بیانات اہم عہدے والوں کو زیب نہیں دیتے“۔انٹرویو کے دوران جب ان سے پوچھا گیا کہ بھارتی آرمی چیف نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ وہ پاکستان کی جوہری صلاحیت کو ایک فریب قرار دینے کے لیے تیار ہیں، اس پر پاک فوج کا کیا رد عمل ہے تو ڈی جی آئی ایس پر آر نے کہا کہ ”ہم سمجھتے ہیں کہ آرمی چیف ایک انتہائی ذمہ دارانہ تقرری ہوتی ہے اور فور اسٹار وہ رینگ ہے جو زندگی بھر کے تجربے اور پختگی کے بعد حاصل ہوتا ہے، لہٰذا اس ذمہ دار عہدے پر موجود شخص کی طرف سے ایسا غیر ذمہ دارانہ بیان نامناسب ہے“۔ڈی جی آئی ایس پی آر نے یہ بھی کہا کہ پاکستان کی جوہری صلاحیت مشرق کی طرف سے آنے والے خطرات کے لیے ہے اور ہم پاکستان کے خلاف کسی بھی بھارتی مہم جوئی کا جواب دیں گے۔انہوں نے کہا کہ بھارت ہمارا عزم آزمانہ چاہتا ہے تو آزما لے لیکن بھارت ہمارے عزم کو آزمانےکا نتیجہ خود دیکھے گا، پاکستان کی جوہری صلاحیت بھارت سے نمٹنے کے لیے ہے۔انہوں نے کہا کہ ہم جوہری ہتھیار کو اولین انتخاب نہیں بلکہ دفاعی و مزاحمتی ہتھیار سمجھتے ہیں، بھارت کو جو چیز جنگ سے روک رہی ہے وہ ہماری قابل بھروسہ جوہری صلاحیت ہی ہے کیوں کہ دو جوہری ہتھیاروں کے حامل ممالک کے درمیان جنگ کی گنجائش موجود نہیں۔ڈی جی آئی ایس پی آر نے کہا کہ پاکستان کے جوہری طاقت بننے کے بعد اگر بھارت روایتی طریقوں سے پاکستان پر غالب آنے کی صلاحیت رکھتا تو اب تک ایسا کرچکا ہوتا۔انہوں نے کہا کہ بھارت ریاستی دہشت گردی کے ذریعے ہمیں نشانہ بنارہا ہے لیکن بھارت کسی خوش فہمی میں نہ رہے کیوں وہ ریاستی دہشت گردی میں بھی ناکام ہوچکا ہے۔یاد رہے کہ بھارتی آرمی چیف جنرل بپن روات نے پاکستان کے خلاف ہرزہ سرائی کرتے ہوئے پاکستان کی جوہری صلاحیت کو فریب قرار دیا تھا۔

متعلق ویب ڈیسک